ہلال نیوز

کرونا وائرس۔ سندھ  میں پاک فوج کی سرگرمیاں

کرونا وائرس نے پوری دنیا کے بیشتر ممالک کو اپنی لپیٹ میں لے لیا ہے۔ پاکستان اپنے بروقت اقدامات کی بدولت اس کے پھیلائو کو روکنے میں کسی حد تک کامیاب رہا ہے۔ وفاقی و صوبائی حکومتوں، دفاعی اداروں کی مربوط حکمتِ عملی کی بدولت COVID-19 سے متاثرہ افراد کا گراف دنیا کے دیگر ممالک کی نسبت نیچے رہا۔  اس تمام عرصے میں عوام کا قومی جذبہ قابلِ تعریف ہے کہ کاروبار کی بندش اور لاک ڈائون کی صورتحال کے باوجود انتہائی ڈسپلن کا مظاہرہ کررہے ہیں اور حکومتی اداروں سے نہ صرف تعاون کررہے ہیں بلکہ تمام SOPs پر عمل پیرا ہیں۔ باشعور عوام انتہائی مشکل دور سے گزر رہے ہیں۔ لیکن کروناوائرس کے خلاف جنگ میں ان کا کردار ہمیشہ یاد رکھا جائے گا جس سے اس وبا پر قابو پانے میں مدد ملے گی۔



ڈاکٹرز، طبی عملے اور صحت کے شعبے سے وابستہ افراد کی خدمات ملکی تاریخ میں  ہمیشہ سنہرے حروف سے لکھی جائے گی، جو فرنٹ لائن سولجرز کے جذبے سے سرشار نامساعد حالات میں کام سرانجام دے رہے ہیں اور اس راہ جہاد میں اپنی جانوں کا نذرانہ بھی پیش کیا ہے۔ قوم ان کے جذبے اور خدمات کو ہر فورم پر اپنے اندازمیں خراجِ تحسین پیش کررہی ہے۔ نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر ایک مربوط نظام کے تحت روزمرہ کی بنیاد پر ملک اور دنیا بھر سے ڈیٹا اکٹھا کررہا ہے اور تمام سٹیک ہولڈرز کے ساتھ منسلک رہ کر حکمتِ عملی مرتب کی جاتی ہے۔
 چیف آف آرمی سٹاف جنرل قمرجاوید باجوہ کی ہدایات کی روشنی میں آرٹیکل 245 کے تحت ملک بھر میں پاک آرمی نے اپنی ذمہ داریاں سنبھالیں۔ سندھ میں چیک پوسٹوں پر ڈیوٹی، فلیگ مارچ، موبائل پٹرولنگ اور راشن کی تقسیم کا عمل جاری رکھا۔ حیدر آباد، پنوں عاقل چھائونیوں سے ملحقہ دور دراز علاقوں میں راشن تقسیم کیا گیا۔ ضرورت مند ہندو برادری کے لوگوں میں بھی راشن کی تقسیم کی گئی۔ پاک آرمی نے سندھ حکومت کے شانہ بشانہ کرونا وائرس سے متاثر افراد کو طبی سہولیات کی فراہمی کے لئے آئیسولیشن سینٹرز قائم کرنے کے لئے بھی تعاون کیا ہے۔
 اس سلسلے میں کراچی ایکسپو سینٹر پر ایک فیلڈ آئیسولیشن سینٹر بنایا گیا جس کا انتظام اور سکیورٹی کی ذمہ داری پاک فوج کے سپرد ہے۔ محکمہ صحت کے ڈاکٹرز، پیرامیڈیکل سٹاف اور دیگر عملے اور والنٹیئرز جنہوں نے اپنی خدمات COVID-19 سے متاثرہ مریضوں کے لئے وقف کی ہوئی ہیں، کے ساتھ مل کر دن رات مصروف عمل ہیں۔ یہ آئیسولیشن سینٹر، سینیئرڈاکٹرز اور دیگر عملے کی خدمات اور ہمہ وقت دستیابی کے ساتھ ساتھ تمام ضروری آلات، سہولیات اور ادویات سے مزین ہے۔ یہاں مریضوں کے لئے تینوں وقت کا صحت بخش کھانا، انٹرنیٹ وائی فائی اور دیگر سہولیات بھی موجود ہیں۔ اس آئیسولیشن سینٹر میں مریض کی آمد سے صحت مند رخصت تک تمام دیٹا مانیٹر کیا جاتا ہے۔فیلڈ آئیسولیشن سینٹر کراچی کا افتتاح گورنر سندھ عمران اسماعیل نے کیا۔ اس موقع پر وزیر صحت سندھ عذرا فضل پیچوہو، کمانڈر کراچی کورلیفٹیننٹ جنرل ہمایوں عزیز، سینیئر سول و فوجی افسران، ڈاکٹرز اور طبی عملہ موجود تھا۔ وزیر اعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ نے فیلڈ آئیسولیشن سینٹر کا دورہ کیا اور فراہم کردہ سہولیات اور سٹاک کا معائنہ کیا۔ انہوں نے تعینات عملے سے بریفنگ لی اور ان کے جذبے کی تعریف کی۔
 ( رپورٹ آئی ایس پی آر کراچی)
 

یہ تحریر 148مرتبہ پڑھی گئی۔

TOP