خصوصی رپوٹ

نیشنل ایمیچر شارٹ  فلم فیسٹیول- 2021

سوشل میڈیا کے دور میں مختصر دورانیہ کی فلموں کی مقبولیت میں دن بدن اضافہ ہورہا ہے۔ بالخصوص نوجوانوں کی شارٹ فلمز میں دلچسپی کو دیکھتے ہوئے آئی ایس پی آر نے گزشتہ سال نیشنل ایمیچر شارٹ فلم فیسٹیول کے انعقاد کا فیصلہ کیا۔یہ اپنی طرز کا پہلا تھیم بیسڈ فلم فیسٹول تھا۔فیسٹیول کی ماسٹر تھیم پاکستان کے بارے میں عمومی تاثر کو حقیقت سے ہم آہنگ کرنا تھا۔ نوجوانوں میں ٹیلنٹ کی تلاش ، ان کی صلاحیتوں کو نکھارنا اور انھیں شناخت دینا مقابلے کے مقاصد میں شامل تھا۔مقابلے میں تین طرح کے نوجوان شامل کیے گئے۔ سٹوڈنٹ کیٹگری، پروفیشنل کیٹگری اورموبائل فون کیٹگری۔موبائل فون سے بنائی گئی شارٹ فلمز شامل کرنے کا مقصد زیادہ سے زیادہ نوجوانوں کو موقع دینا تھا۔



نومبر 2020 میں نوجوانوں کو چھہ مختلف تھیمز دی گئی تھیں۔ان میں پاکستان کے ثقافتی اور سماجی رنگ،معاشرے میں خواتین کا بھرپور کردار،وادیِ سندھ کی تہذیب، علاقائی ثقافتیں، پاکستانیوں کی انسان دوستی اور جذبہ ایثار، زراعت اور چھوٹے پیمانے پر صنعتی سرگرمیاں شامل تھیں۔ اس مقابلے کے بارے میں ملک بھر کے نوجوانوں کو  ضروری آگاہی دینے کے لئے پاکستان کے کئی معروف فنکاروں کو (Ambassadors) ایمبیسڈرز کے طور پر چنا گیا۔


نوجوانوں کی بھرپور شرکت کو یقینی بنانے کے لیے 72  یونیورسٹیوں سے رابطہ کیا گیا۔جنوری 2021 میں ملک بھر سے 1100 سے زائد نوجوانوں نے رجسٹریشن کرائی۔10 مارچ 2021 تک 300 سے زائد شارٹ فلمز موصول ہوئیں۔ابتدائی جیوری نے ان میں سے 122 فلمز شارٹ لسٹ کیں۔اس کے بعد 23 سے 28 جون تک گرینڈ جیوری نے کڑی جانچ کے بعد 55 فلمز شارٹ لسٹ کیں۔گرینڈ جیوری میں پاکستان کی فلم اور ڈرامہ انڈسٹری کے معتبر ناموں کے ساتھ ساتھ ایک غیر ملکی ماہر بھی شامل تھا۔جیوری نے 18 بہترین فلموں کو انعام کے لیے منتخب کیا ۔اس کے ساتھ ساتھ 8 نوجوانوں کو ان کے مخصوص ہنر کے حوالے سے انعامات کے لئے منتخب کیا گیا۔





فیسٹیول میں فلم ٹی وی اور میڈیا کے سٹوڈنٹس نے اپنے تخلیقی جوہر کا شاندار مظاہرہ کیا۔ ہونہار آرٹسٹس نے پاکستان کے دلفریب رنگوں کو اپنے پراجیکٹس میں بخوبی سمویا۔باصلاحیت نوجوانوں نے دنیا کو پاکستان کا روشن چہرہ دکھا کر قوم کا مان بڑھایا ہے۔ان میں سے 15 بہترین فنکاروں کو اعلیٰ تعلیم و تربیت کے لیے سکالر شپ پر بیرون ممالک بھیجا جائے گا۔یہی فنکار ٹریننگ کے بعد پاکستان کی فلم انڈسٹری اور ڈیجیٹل میڈیا کی ترقی میں اپنا بھرپور کردار ادا کریں گے۔




26 جون کو پاک چائنا فرینڈ شپ سینٹر اسلام آباد میں نیشنل ایمیچر شارٹ فلم فیسٹیول کی خوبصورت تقریب کا انعقاد کیا گیا۔ جس میں وزیر اعظم عمران خان نے نوجوان نسل کی حوصلہ افزائی کے لیے خصوصی شرکت کی۔ڈی جی آئی ایس پی آر میجر جنرل بابر افتخار نے وزیراعظم کی آمد پر ویلکم نوٹ دیا اور حاضرین کو NASFF-2021 کے بنیادی تصور، اہم خدو خال اور اغراض و مقاصدکے انعقاد کے بارے میں آگاہ کیا۔ ڈی جی آئی ایس پی آر نے نوجوان نسل کی صلاحیتوں پر اپنے بھرپور اعتماد کا اظہار کیا اور پاکستان کا روشن چہرہ دنیا کو دکھانے کی ذمہ داری نبھانے پر اُن کی حوصلہ افزائی کی۔ اس موقع پر وفاقی وزیر اطلاعات و نشریات جناب فواد چوہدری نے اس فقیدالمثال صحت مندانہ مقابلے کے انعقاد پر آئی ایس پی آر کو خراجِ تحسین پیش کیا۔ اس کے بعد مقابلے کی بہترین شارٹ فلموں پر مبنی ایک ویڈیو پیکج بھی حاضرین و ناظرین کو دکھایا گیا کہ جس سے نوجوان فنکاروں کی محنت اور کام کی عمدگی کھل کر سامنے آئی۔
آخر میں وزیر اعظم عمران خان نے جیتنے والے ہونہار فنکاروں کو اعزازات اور انعامات سے نوازا۔ سٹوڈنٹس کیٹگری میں یاور شاہ، عقیدت چشتی، حمزہ بن افتخار، وِشال، کدوانی، ایمان منیر، حارث لطیف، حذیفہ احمد، سیدہ علین رضوی، شاہزیب علی، عرفان نور، عامر خان اور اسامہ حسین نے انعامات حاصل کئے۔ جبکہ سپیشل پروفیشنل کیٹگری میں ولید اکرم، روہی کاشف اور ولِیم عباس شامل تھے۔ موبائل فون کیٹگری میں نصیر احمد، محمد وسیم اور سید محمد حیدر شاہ اعزازات کے حقدار قرار پائے۔



وزیراعظم نے اس موقع پر نوجوان نسل سے خصوصی خطاب بھی کیا۔ وزیراعظم نے آئی ایس پی آر کے اس  اعلیٰ اقدام کو سراہا اور نوجوانوں کو ایسا پلیٹ فارم مہیا کرنے کی کاوش پر ادارے کے سربراہ کو خراجِ تحسین پیش کیا۔انہوں نے کہا کہ مجھے اپنے  نوجوانوں سے بہت اُمیدیں ہیں۔ وزیراعظم نے نوجوان فنکاروں کو اپنی تخلیقات میں اوریجنیلٹی کو یقینی بنانے اور پاکستانیت کے فروغ پر زور دیا۔ ||
 

یہ تحریر 106مرتبہ پڑھی گئی۔

TOP