ہلال نیوز

نیشنل یونیورسٹی آف ٹیکنالوجی اسلام آباد میں تقریب ِتقسیمِ اسناد

گزشتہ دنوں نیشنل یونیورسٹی آف ٹیکنالوجی (نیوٹک) اسلام آباد میں آرمی ٹی ویٹ رجیم (اے ٹی آر) کے پائلٹ پراجیکٹ کے دوران چلنے والے کورسز کے کامیاب طلباء کو ٹیکنیکل اور ووکیشنل اسناد تقسیم کرنے کی ایک سادہ اور پُروقار تقریب منعقد ہوئی جس کے مہمانِ خصوصی انسپکٹر جنرل ٹریننگ اینڈ ایویلیو ایشن، لیفٹیننٹ جنرل سید محمدعدنان تھے۔
تقریب میں عسکری تربیتی اداروں کے طلبا، ان کے تربیتی افسران اور کمانڈنٹ، جنرل ہیڈکوارٹرز کے ڈائریکٹرز اور ڈائریکٹر جنرلز اور نیشنل ووکیشنل اینڈ ٹیکنیکل ٹریننگ کمیشن(نیوٹی ٹی سی) کے اعلیٰ حکام نے شرکت کی۔ مہمانوں کا استقبال ریکٹر نیوٹیک لیفٹیننٹ جنرل معظم اعجاز(ریٹائرڈ) نے کیا۔ حاضرین کو آرمی ٹی ویٹ رجیم (اے ٹی آر) کے اغراض و مقاصد، اب تک ہونے والی پیش رفت اور پروگرام سے متعلق مستقبل کی سرگرمیوں کے بارے میں بتایاگیا۔



پاک فوجی کے سپاہی اعلیٰ تربیت  یافتہ ہیں اور اپنی سروس کے مختلف مراحل میں ٹیکنیکل اور ووکیشنل مہارت بھی حاصل کرتے ہیں۔ اے ٹی آر ، چیف آف آرمی سٹاف جنرل قمر جاوید باجوہ کے وژن کے مطابق وضع کیاگیا ہے اور عملدرآمد کے مرحلے میں ہے۔ اے ٹی آر کا مقصد قومی وبین الاقوامی معیار کے مطابق ووکیشنل مہارت کو بہترین بنانا ہے تاکہ فوجی اپنے فرائض منصبی بہتر طریقے سے انجام دے سکیں، اس کے ساتھ ساتھ فوجی جوانوں کو ایسی سند سے نواز اجائے جس سے انہیں ریٹائرمنٹ کے بعد قابلیت کے مطابق بہترروز گار کے مواقع میسر آسکیں اور قومی اور بین الاقوامی صنعت کو ہنر مند افرادی قوت میسر آسکے۔
انسپکٹر جنرل ٹریننگ ایویلیو ایشن، لیفٹیننٹ جنرل سیدمحمدعدنان نے اے ٹی آر  پر عمل درآمد میں نیشنل یونیورسٹی آف ٹیکنالوجی کی کاوشوں اور نیو ٹی ٹی سی ، جنرل ہیڈ کوارٹرز کی برانچز اور ڈائریکٹوریٹس اور تربیتی اداروں سمیت تمام اسٹیک ہولڈرز کی طرف سے تعاون کی تعریف کی اور مستقبل کی کوششوں کے لیے نیک خواہشات کا اظہار کیا۔
اے ٹی آر میں شامل کورسز کے پہلے پیج نے اپنی تربیت مکمل کرلی ہے اور کامیاب طلباء کو اسناد سے نوازا گیا ہے۔اے ٹی آر کو 2024کے آخرتک مرحلہ وار پوری فوج میںمکمل طور پر نافذ کردیا جائے گا۔

Read 83 times


TOP